ملک بھر میں بجلی کا بڑا بریک ڈاؤن

بجلی کا بڑا بریک ڈاؤن(power breakdown) ہونے کی وجہ سے ملک کے مختلف علاقوں میں بجلی کی فراہمی معطل ہوگئی ہے۔ذرائع نیشنل پاور کنٹرول کے مطابق، اس وقت سسٹم مکمل طور پر بند ہے، مین لائینوں میں فالٹ کی وجہ سے پورا سسٹم بیٹھ گیا ہے۔ذرائع کا کہنا ہے کہ ابھی بجلی کے بریک ڈاون کی وجہ جاننے کی کوشش کی جارہی ہے، بحالی میں کئی گھنٹے لگ سکتے ہیں۔

وزارت توانائی کے مطابق، وارسک سےگرڈ اسٹیشنز کی بحالی کا آغاز کردیا گیا ہے۔

پاورڈویژن کا کہنا ہے کہ اسلام آباد اور پشاورسپلائی کمپنیز کےمحدود علاقوں میں گرڈ بحال کردیےگئے۔

اسلام آباد
ترجمان اسلام آباد الیکٹرک سپلائی کمپنی کے مطابق، 117 گرڈ اسٹیشنز کو بجلی کی فراہمی معطل، ترجمان آئیسکو

اُنہوں نے بتایا کہ ریجن کنٹرول سینٹر کی جانب سے ابھی تک کوئی واضح وجہ نہیں بتائی گئی۔

ترجمان آئیسکو کا کہنا ہے کہ آئیسکو انتظامیہ متعلقہ حکام کے ساتھ مسلسل رابطے میں ہے۔

اس حوالے سے آئیسکو کے سی ای او ڈاکٹر محمد امجد نے جیو نیوز سے گفتگو کرتے ہوئے بتایا کہ گرڈ کی بحالی کا عمل شروع ہوگیا ہے۔

اُنہوں نے کہا کہ ملک بھر میں بجلی کی بحالی رفتہ رفتہ ہوگی تاکہ سسٹم پر لوڈ نہ پڑے۔

دوسری جانب، سیکریٹری پاور ڈویژن راشد محمود نےجیو نیوز کو بتایا کہ بجلی بریک ڈاون کے معاملے پر تحقیقات کی ہدایت کردی۔

اُنہوں نے کہا کہ ابتدائی اندازے کے مطابق، خرابی ساؤتھ ریجن میں پیدا ہوئی۔

صوبہ سندھ
صوبہ سندھ میں شہرِ قائد کےمختلف علاقوں میں بھی بجلی کی فراہمی معطل ہوگئی ہے۔
کراچی الیکٹرک کے ذرائع کے مطابق، 90 فیصد شہر کی بجلی غائب ہے اور نیشنل گرڈ میں خلل اس بریک ڈاؤن کا ممکنہ سبب ہے۔

ترجمان کےالیکٹرک کا کہنا ہے کہ اطلاعات کے مطابق آج صبح 7 بج کر 34 منٹ پر نیشنل گرڈ میں فریکوئینسی کم ہونے کے باعث متعدد شہروں کو بجلی فراہمی متاثر ہوئی۔

مزیدخبروں کے لیے ہماری ویب سائٹ ہم مارخور وزٹ کریں۔