موجودہ قیمت پر پیناڈول پروڈکٹس بنانا ممکن نہیں رہا، نجی دوا ساز کمپنی

اسلام آباد ( نیوز ڈیسک) – نجی دوا ساز کمپنی کا کہنا ہے کہ موجودہ قیمت پر پیناڈول ( Panadol) پروڈکٹس بنانا ممکن نہیں رہا۔

کمپنی کا کہنا ہے کہ وزیراعظم کے پرنسپل سیکرٹری توقیر شاہ کو لکھے گئے خط کے مطابق پیناڈول ٹیبلیٹس، پیناڈول ایکسٹرا اور بچوں کے لیے سیرپ بنانا بند کر رہے ہیں۔

نجی دوا ساز کمپنی کے جنرل منیجر نے خط میں لکھا کہ گزشتہ کئی مہینوں سے نقصان اٹھا کر پیناڈول بنا رہے تھے جو اب ممکن نہیں۔ حکومت ڈریپ کی منظور شدہ قیمت منظور کرے تو ادویات دوبارہ بنانا شروع کر دیں گے۔

موسم سرما کی آمد کے ساتھ ہی پیناڈول کی زیادہ مانگ ہوتی ہے۔ فی الحال یہ 1.78 روپے کی مقررہ قیمت ہے جو بلیک مارکیٹ میں 3 سے 5 روپے کے درمیان فروخت ہو رہی ہے۔ کمپنی قیمت کو بڑھا کر 2.75 روپے کرنے کو کہہ رہی ہے جس سے مینوفیکچرنگ لاگت میں اضافہ ہو گا۔ ڈریپ نے اضافے کی شفارش کی مگر کابینہ نے سیاسی وجوہات کی بنا پر ایسا نہیں کیا۔

مزیدخبروں کے لیے ہماری ویب سائٹ ہمارخور وزٹ کریں۔