عمران خان کا کوئ مدمقابل نہیں،مرکز میں عمران خان کے بغیرحکومت نہیں بن سکتی.

عمران خان ( Imran Khan) کے ستارے بہت اسٹرانگ ہیں۔ ڈاکٹر عمر فاروق مشہور آسٹرولوجر(Dr. Umer Farooq Astrologer)
اسٹرالوجی ۳۶۰ درجے کا علم ہے۔ہماری زمین آسمان کے جو ۳۶۰ در جے ہیں اس کے سامنے گھوم رہی ہے۔جس میں سورج کا نکلنا ،آگے آنا اور پھر غروب ہونا اور پھر دوبارہ طلوع ہونا۔ یہ سب باتیں ہیں جس سے زمین اپن سفر طے کر رہی ہے۔اس میں سورج روزانہ جو سفر طے کرتا ہے اور اس میں آگے بڑھنے کا جو عمل ہے وہ بھی جاری ہے۔ اور ہماری زمین ایک نامعلوم سمت کی طرف بڑھ رہی ہے۔جسے اسرا کا ٹائم کہا جاتا ہے، اس کو بھی زائچہ میں درج کیا جاتا ہے جو بہت ضروری ہے۔
ڈاکٹر صاحب الیکشن ۲۰۲۴ (Election 2024) کے حوالے سے کافی عرصے سے اپنی پری ڈکشنز دے رہے ہیں ۔ آپ کا کہنا تھا کہ اس الیکشن میں لوگ بھرپور طریقے سےنکلیں گے اور اپنا ووٹ کاسٹ کریں گے۔ نوجوان باہر آئیں گے اور پورا ملک خان صاحب کے ساتھ کھڑا ہوگا۔ الیکشن میں جیت کر بہت سے نئے چہرے آئیں گے اور پرانے سیاستدان ہارکرگھر جائیں گے۔اسمبلی میں وہ لوگ آئیں جو کھبی سیاست میں نہیں تھے۔ جن لوگوں کی پیدائش ۱۹۷۲ سے ۱۹۸۰ کے درمیان ہوئی وہ جیت کر آئیں گے۔

عمران خان کے حوالے سے ڈاکٹر صاحب کا کہنا تھا کہ عمران خان صاحب ( Imran Khan) کے ستارے بہت اسٹرانگ ہیں کوئی ان کا کچھ نہیں بگاڑ سکتا ۔ان کی حکومت ختم کرنے سے، ان کو جیل میں ڈالنے ،مقدمات بنانے اور سزائیں دینے سے کچھ نہیں ہوگا، یہ خان صاحب خآ کچھ نہیں بگاڑ سکتے،اس سے خان صاحب اور مضبوط ہوں گے۔ ان کی مقبولیت میں روز بروز اضافہ ہوگا۔ وہ صرف پاکستان میں مقبول نہیں ہوں گے بلکہ عالمی سطح پران کی مقبولیت میں اضافہ ہوگا۔
آپ عدلیہ (Judiciary) کے متعلق بھی کہتے رہے کہ آنے والے دنوں میں عدلیہ بہت مضبوط ہوگی ا ور بڑے دبنگ فیصلہ کرے گی. الیکشن رزلٹ آنے کے بعد آپ کا کہنا ہے کہ عمران خان کے بغیر مرکز میں حکومت نہیں بن سکتی۔ اور اگر بن بھی گئی تو چل نہیں سکتی۔ یہ ایسا ہی ہے جیسا کسی کے مقدر میں اللہ پاک نے جو لکھ دیا ہے وہ کوئی چھین نہیں سکتا۔

ان کہا کہنا تھا کہ بہت سے لوگ پوچھ رہے ہیں کہ عوام نے بڑی تعداد میں باہر نکل کر PTI کے لوگوں کو ووٹ دیے ہیں فارم ۴۵کےمطابق PTI کے امیدوار جیت گئے ہیں لیکن رزلٹ روک لیے گئے ہیں اور دھاندلی کی جارہی ہے اسکا کیا بنے گا۔ آپ کا کہنا تھا کہ کوئی کچھ نہیں کر سکتا، کوئ وؤٹ چوری نہیں کر سکتا، عدلیہ کے فیصلے عوام کے حق میں آئیں گے۔
عمران خان (Imran Khan) کا زائچہ پیدائش بہت مضبوط ہے ان کا دور دور تک کوئی مد مقابل نہیں ہے۔
ڈاکٹر صاحب کا کہنا تھا کہ خان صاحب کو اس ملک کا خیال ہے وہ ملک و قوم کے ساتھ مخلص ہیں ایسا لیڈر بہت مشکل سے ملتا ہے۔ خان صاحب کا اس ملک و قوم پر بہت بڑا احسان ہے کہ انہوں نے اس قوم کو ایک قوم بنا دیا ہے۔ وہ بہت جلد باہر ہوں گے ان کو اب اندر نہیں رکھ سکتے۔
ووٹ کوئی چوری نہیں کر سکتا۔ دھاندلی والے فیصلے واپس ہوں گے۔
۱۳ فروری سے تبدیلی کا عمل شروع ہو جائے گا۔

مزیدخبروں کے لیے ہماری ویب سائٹ ہم مارخور وزٹ کریں۔